pti

تحریک انصاف کا پورے صوبے سے صفایا ۔۔۔۔مرکزی رہنماء سمیت 500 کے قریب عہدیداران اچانک مستعفی، ملکی سیاست میں ہلچل مچ گئی

کوئٹہ چیئرمین تحریک انصاف عمران خان اور یار محمد رند کے رویے کیخلاف تحریک انصاف کے 500 سے زائد عہدیداروں اور کارکنوں نے مستعفی ہونے کا اعلان کردیا ہے۔روزنامہ نوائے وقت کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی کوارڈینیٹر تعلقات عامہ عظیم کاکڑ، سابق سٹرٹیجک کونسل ممبر و رکن صوبائی کونسل سید نصیب آغا، بانی

رکن و سابق صوبائی نائب صدر سید عمر آغا سمیت 500 سے زیادہ عہدیداروں، کارکنوں اور مختلف اضلاع سے تعلق رکھنے والے صدر اور جنرل سیکرٹری نے پارٹی کے مرکزی چیئرمین عمران خان اور صوبائی صدر سردار یار محمد رند کے رویئے کیخلاف پارٹی سے مستعفی ہونے کا اعلان کیا ہے، انہوں نے یہ اعلان جمعہ کے کوئٹہ پریس کلب میں سینکڑوں کارکنوں کی موجودہ گی میں کیا۔ واضح رہے کہ بلوچستان میں اتحادی حکومت کے قیام کے بعد سے لے کر اب تک تحریک انصاف کو مشکلات کا سامنا ہے اس سے قبل بھی تحریک انصاف کو ایک اور سینئر رہنما کی بغاوت کا سامنا کرنا پڑ گیا ہے۔ عمران خان سے ملاقات نہ ہو پانے پر تحریک انصاف کے سینئر نائب صدر نے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ تحریک انصاف بلوچستان کے نائب صدر خدائے نور نے اپنے عہدے سے استعفا دےدیا ہے۔خدائےنور کا کہنا ہے کہ وہ گزشتہ 9 ماہ سے عمران خان سے ملاقات کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ تاہم ملاقات کرنے میں مسلسل ناکامی ان کیلئے باعث شرمندگی ہے۔ اس لیے انہوں نے اپنے عہدے سے مستعفی ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔ خدائے نور کا مزید کہنا ہے کہ پارٹی معاملات میں کوئی مشاورت نہیں کی جاتی۔ تاہم وہ ایک عام ورکر کی حیثیت سے پارٹی کا ہی حصہ رہیں گے۔ اور پارٹی کے لیے کام کرتے رہیں گے۔