یہ نوجوان لڑکی صرف چھٹی والے دن یہ کام کر کے سال میں 1 کروڑ روپے کما لیتی ہے، مگر کیسے؟ جان کر آپ کا بھی دل کرے گا یہی کام شروع کردیں

کنبرا : ایک چینی لڑکی تعلیم کے سلسلے میں آسٹریلیا گئی اور وہاں اس نے انٹرنیٹ پر ایک ایسا کام شروع کر دیا کہ وہ ہفتے میں محض ایک دن کام کرکے سالانہ 1کروڑ روپے کما رہی ہے۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق مولڈر سےراﺅ نامی یہ لڑکی 2014ءمیں چین سے آسٹریلیا پڑھنے آئی۔ جب وہ سڈنی پہنچی تو کچھ ہی دن بعد

اس کے گھر والوں نے اس سے کچھ اشیاءمنگوائیں جن میں شیرخوار بچوں کی خوراک اور وٹامنز وغیرہ شامل تھے۔اس نے اپنے گھر والوں کو یہ چیزیں بھیجی تو علاقے میں اس کی خبر پھیل گئی اور دیگر لوگوں نے بھی اس سے یہ اشیاءمنگوانی شروع کر دیں۔یہاں سے سےراﺅ کو یہ کاروبار کرنے کا آئیڈیا آیا۔ اس نے پیغام رسانی کی ایپلی کیشن WeChatپر چین میں مختلف لوگوں سے رابطہ کیا اور اس کاروبار کی مارکیٹنگ کی۔ جلد ہی اسے مستقل گاہک دستیاب ہو گئے۔ اب وہ سڈنی کی سپرمارکیٹ سے بچوں کی خوراک، وٹامنز، سکن کیئر کی مصنوعات اور دیگر اشیاءخرید کر چین میں اپنے گاہکوں کو بھیجتی ہے۔ اب اس کے مستقل گاہکوں کی تعداد 1500تک پہنچ چکی ہے اور وہ ہفتہ وار چھٹی کے روز یہ اشیاءخرید کر چین ارسال کرتی ہے اور ہر ہفتے اس کام سے اسے 1700ڈالر (تقریباً 1لاکھ 87ہزار روپے) منافع ہوتا ہے۔سیراﺅ کا کہنا ہے کہ ”میں ہر ہفتے لگ بھگ 1ہزار پارسل چین بھیجتی ہوں، جن میں 4سے 5مختلف مصنوعات ہوتی ہیں۔اشیاءکی خریداری اور انہیں پارسل کرنے میں مجھے محض چند گھنٹے لگتے ہیں۔“