chief justice saqib nisar

ریٹائر ہونے کے بعد کیا کرونگا ؟ چیف جسٹس آف پاکستان نے ایسا اعلان کر دیا کہ 22 کروڑ عوام خوشی سے جھوم اٹھے

اسلام آباد:چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار نے کہا ہے کہ میرے سیاسی عزائم ہرگز نہیں ہیں، ریٹائرمنٹ کے بعد نہتوسیاست میں آوں گا، وکالت بھی نہیں کروں گا بلکہ تعلیمی میدان میں اپنی خدمات سرانجام دوں گا۔سپریم کورٹکادورہکرنیوالے نجی یونیورسٹی کے طلباء کے وفد سےگفتگو کرتے ہوئے چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ سیاسی مقدمات میں تمام فریقین نے عدالتی دائرہ اختیارتسلیم کیا۔

سپریم کورٹ سمیت تمام عدالتیں آئین اور قانون کی پاسدار ہیں، عدلیہ کو برا بھلا کہنے والوں کے معاملے کو ذاتی حیثیت میں نہیں دیکھ رہے، اس حوالے سے قانون خود اپنا راستہ لے گا۔چیف جسٹس ثاقب نثار کا مزید کہنا تھا کہ عدالت نے آج تک جتنے بھی ازخود نوٹسز لئے وہ عوام کے بنیادی حقوق سے متعلق ہیں، کبھی کسی سیاسی مقدمے پر ازخود نوٹس نہیں لیا گیا کیونکہ بنیادی حقوق کا تحفظ کرنا عدلیہ کی ذمہ داری ہے۔انہوں نے واضح کیا کہ میرے سیاسی عزائم ہرگز نہیں ہیں، ریٹائرمنٹ کے بعد نہ تو سیاست میں آؤں گا نہ وکالت کروں گا بلکہ تعلیمی میدان میں اپنی خدمات سرانجام دوں گا۔چیف جسٹس آف پاکستان نے کہا کہ بڑے محلات میں رہنے والے غریبوں کے حقوق کی باتیں کرتے ہیں، بلوچستان کی طرح خیبر پختونخوا بھی جاو191ں گا، بلوچستان میں پانی ذخیرہ نہ کرکے غفلت کا مظاہرہ کیا گیا، صاف پانی، توانائی ،صحت اور تعلیم جیسے بنیادی حقوق کیلئے کچھ نہیں کیا گیا۔انہوں نے کہا کہ عام انتخابات اپنے مقررہ وقت پر ہی ہوں گے، شفاف انتخابات کی ضمانت دیتے ہیں، عدالتی بنیادی اصلاحات کے لئے کام شروع کردیا ہے، عدالتی اصلاحات نافذ کریں گے عوام کو جلد تبدیلی نظرآئے گی۔: