supreme court of pakistan

’’ آپکی بات سُن کر مجھے شرمندگی ہو رہی ہے اور۔۔۔۔۔۔‘‘ توہین عدالت کیس میں جسٹس عظمت سعید نے دانیال عزیز کو ایسا کیوں کہا؟ تازہ ترین خبر (ن) لیگیوں کے ہوش اُڑا دیئے

اسلام آباد:سپریم کورٹ میں توہین عدالت کیس کی سماعت کے دوران دانیال عزیز نے جاویدہاشمی کیسی ڈی پیش کرتے ہوئے ویڈیو پر اعتراض اٹھا دیا۔تفصیلات ے مطابق سپریم کورٹ کے جج جسٹس عظمت سعید نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ آپ کوایڈیٹنگ کامسئلہ ہے تواصل ویڈیوبھی منگوا لیتے ہیں۔اس پر دانیال عزیز کے وکیل عزیزعلی رضانے کہا کہ نجی ٹی وی کاکلپ ایڈٹ شدہ ہے

،جاننا چاہتے ہیں ویڈیو کس نے بنائی اور کس نے ایڈٹ کی۔جسٹس عظمت سعید نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ آپ کی بات سن کر مجھے شرمندگی ہو رہی ہے،آپ تاخیری حربے استعمال نہ کریں ،سیدھا چلیں گے تو آپ کیلئے بہتر ہو گا،آپ کوایڈیٹنگ کامسئلہ ہے تواصل ویڈیوبھی منگوا لیتے ہیں۔اس پر ایڈیشنل اٹارنی جنرل رانا وقارنے کہا کہ عدالتکے سامنے معاملہ ایڈیٹنگ کانہیں ہے۔جسٹس عظمت سعید نے استفسار کیا کہ کیا کسی اور نے دانیال عزیز کی آواز نکالی؟۔معزز جج نے کہا کہ کسی اور کا دانیال عزیز کی آواز نکالنا مشکل لگتا ہے۔دوران سماعت وکیل دانیال عزیزنے جاویدہاشمی کی سی ڈی بھی عدالت میں پیش کی،جسٹس عظمت سعید نے کہا کہ جاوید ہاشمی کی سی ڈی کا کیس سے تعلق نہیں،عدالت نے جاوید ہاشمی کابیان غیرمتعلقہ قراردےدیا۔