اجنبی لڑکی سے جنسی تعلق قائم کرنے والے شخص کو ایسی بیماری لگ گئی جس کی تاریخ میں کوئی مثال نہیں ملتی، جان کر ڈاکٹروں کے بھی ہوش اُڑگئے کیونکہ۔۔۔

لندن :غیر محفوظ جنسی تعلقات طرح طرح کی بیماریوں کا سبب بنتے ہیں مگر ایک برطانوی شہری تو جنسی ہوس پوری کرنے کی کوشش میں ایسی عجیب و غریب بیماری میں مبتلاءہو گیا ہے کہ جس کی ڈاکٹروں کو بھی سمجھ نہیں آ رہی۔ یاہو نیوز کے مطابق پبلک ہیلتھ انگلینڈ کا کہنا ہے کہ اس شخص کی بیماری سوزاک سے ملتی جلتی ہے لیکن اس کا علاج اینٹی بائیوٹک ادویات سے ممکن نہیں ہے۔

ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ ایسا پہلی بار دیکھنے میں آیا ہے کہ ایزی تھرومائسین سیسٹریا ایکسون کے امتزاج سے کیا جانے والا علاج بھی بیماری کے جراثیموں کا خاتمہ کرنے میں ناکام ہوگیا ہے۔سوزاک کی بیماری غیر محفوط جنسی تعلقات سے پھیلتی ہے اور اس کی علامات میں جسم کے مخصوص حصے سے گاڑھا سبزی مائل یا زردی مائل مواد نکلنا اور تکلیف کے ساتھ پیشاب آنا شامل ہے۔ پبلک ہیلتھ انگلینڈ سے وابستہ ڈاکٹر گوینڈا ہیوز کا کہنا تھا کہ یہ پہلا موقع ہے کہ اینٹی بائیوٹک ادویات کے خلاف اس قدر شدید مزاحمت رکھنے والے جنسی بیماری کے جراثیم دیکھنے میں آئے ہیں۔ اب اس مریض کے علاج کے لئے نئی قسم کی اینٹی بائیوٹک ادویات استعمال کی جارہی ہیں اور ڈاکٹر یہ دیکھنے کے منتظر ہیں کہ نئی ادوایات کا بھی کوئی اثر ہوتا ہے یا نہیں۔