چین نے انتہائی کم پیسوں میں مردوں کو ورغلانے والی ’مشین‘ تیار کرلی، تفصیلات جان کر مردوں کے بھی چہرے شرم سے لال ہوجائیں گے

بیجنگ :دنیا بھر میں کوئی ایسی مہنگی پراڈکٹ نہیں جس کا سستا ورژن چین نے تیار نا کیا ہو۔ اور تو اور، اب چین نے یہی کام مصنوعی ذہانت سے لیس جنسی گڑیا کے ساتھ بھی کر ڈالا ہے۔ اس سے پہلے مصنوعی ذہانت کی حامل جنسی گڑیا صرف مغربی ممالک میں انتہائی مہنگے داموں ملتی تھی مگر چینی کمپنی ’ڈی ایس ڈول‘ کوشش کررہی ہے

کہ سستی ترین جنسی گڑیائیں بنا کر دنیا بھر کے کسٹمرز کو بیچی جائیں۔کمپنی کے انجینئر دن رات اس پراجیکٹ پر کام کررہے ہیں جس کا مقصد مصنوعی ذہانت سے لیس ایسی جنسی گڑیائیں بنانا ہے جو کسی حد تک سوچنے سمجھنے کی صلاحیت بھی رکھتی ہوں اور کسٹمرز کو ہر ممکن اطمینان فراہم کرنے کی کوشش کریں۔ اس سے پہلے بھی دنیا کی کئی کمپنیاں روبوٹ جنسی گڑیائیں بنارہی ہیں، جیسا کہ رئیل بوٹس، سنتھیا امیٹکس وغیرہ، لیکن ڈی ایس ڈول پہلی کمپنی ہے جو یہ گڑیائیں بہت بڑے پیمانے پر بنا کر دنیا بھر میں سستے داموں فروخت کرنا چاہتی ہے۔ کمپنی کا کہنا ہے کہ جلد ہی اس پراجیکٹ کے تحت گڑیاﺅں کی تیاری شروع ہو جائے گی اور پھر یہ انتہائی کم قیمت پر دنیا بھر میں دستیاب ہوں گی۔